29.9 C
Karachi
Saturday, February 24, 2024

مذہب کے لبادے میں ملک کے وزیراعظم سے بڑے بڑے فیصلے کرائے گئے: عون چوہدری

ضرور جانیے

اسلام آباد: استحکام پاکستان پارٹی (آئی پی پی) کے رہنما اور عمران خان اور بشریٰ بی بی کے خلاف عدت میں شادی کے گواہ عون چوہدری کا کہنا ہے کہ وہ ایسے رہنما ہیں، انہوں نے ملک کا مذاق اڑایا، ملک کے فیصلے خوابوں پر کیے گئے۔ .

اڈیالہ جیل کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عون چوہدری کا کہنا تھا کہ عید کے دوران شادی سے متعلق کیس میں جج کے سامنے جو بیان دیا وہ بالکل درست ہے۔ ہوا یوں کہ عید پوری نہیں ہوئی۔

عون چوہدری نے کہا کہ مفتی سعید نے جج کے سامنے اعتراف کیا کہ عید کا معاملہ ان کے علم میں نہیں لایا گیا، وہ خود کو پارٹی کا رہنما کہتے ہیں اور جھوٹ کی بنیاد پر اپنی زندگی کے فیصلے کرتے ہیں، وہ لوگوں اور نوجوانوں کو تعلیم دیتے ہیں۔ جھوٹ پر مبنی شادی پر اپنے آپ کو اتنا بڑا رہنما سمجھ کر بچوں کو کیا سبق مل رہا ہے؟

ان کا کہنا تھا کہ شادی کرنے والی خاتون نے خود کو مذہب کے لبادے میں لپیٹ لیا ہے۔ مذہب کے لبادے میں ملک کے وزیر اعظم نے بڑے بڑے فیصلے کیے، ملک کے ساتھ مذاق کیا گیا، ملک کے فیصلے خوابوں پر کیے گئے، فرح گوگی اور جمیل گجر دراصل خواب کے پیچھے دھوکے بازوں کی جوڑی تھے۔

آئی پی پی رہنما کا کہنا تھا کہ یہ پاکستان کے ساتھ غلیظ مذاق تھا جس کا خمیازہ آج پورا ملک بھگت رہا ہے، ملک کے بڑے فیصلے خواب کے پیچھے کیے گئے۔

انہوں نے مزید کہا کہ جب آپ وزیر اعظم تھے توشہ خانہ سے چوری کرتے تھے۔ یہ شرم کی بات ہے کہ سابق وزیر اعظم کو چوری کا مجرم پایا گیا۔ آپ دوسروں کو چور کہتے رہے اور خود چور نکلے۔ اپنے فرنٹ مین کے ذریعے تحائف فروخت نہ کریں، آپ نے ملک کے ساتھ وہ کیا ہے جو دشمن نہیں کر سکتا۔

عون چوہدری کا کہنا تھا کہ سائفر کے معاملے پر آپ نے ملک کا مذاق اڑایا جس کی سزا دی جا رہی ہے، ہمیں اپنے لیے نوجوانوں کو بغاوت پر اکسانا نہیں چاہیے۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانمذہب کے لبادے میں ملک کے وزیراعظم سے بڑے بڑے فیصلے کرائے...