29.9 C
Karachi
Sunday, May 19, 2024

اسکول پرنسپل ریپ کیس: مشتبہ شخص نے 45 سے زائد خواتین کو نشانہ بنایا

ضرور جانیے

کراچی اسکول پرنسپل ریپ کیس کی تحقیقات کرنے والے تفتیشی افسر (آئی او) نے انکشاف کیا ہے کہ ملزم کی جانب سے نشانہ بنائے جانے والے متاثرین کی تعداد 45 سے زائد ہے۔

ایف آئی آر درج کی گئی ہے جس میں جنسی ہراسانی، بلیک میلنگ اور دھمکی دینے کی دفعات شامل ہیں۔

پولیس نے مشتبہ پرنسپل کے دفتر کو سیل کر دیا ہے کیونکہ مزید فرانزک کی جانی ہے۔

یہ پیش رفت اس وقت سامنے آئی جب پیر کے روز پولیس نے شہر کے گلشن حدید علاقے میں ایک نجی اسکول کے پرنسپل کو اس وقت گرفتار کیا جب متعدد خواتین ملزم پر مبینہ ریپ اور بلیک میلنگ کا الزام عائد کرنے کے بعد سامنے آئیں۔

یہ اسکینڈل اس وقت سامنے آیا جب پرنسپل اور ایک خاتون ٹیچر کی ایک فحش ویڈیو انٹرنیٹ پر گردش کرنے لگی۔

پرنسپل

مزید برآں، حکام نے کہا ہے کہ پرنسپل کے دفتر کو سیل کر دیا گیا ہے اور فرانزک کی جائے گی۔ عدالت نے ملزم عرفان غفور میمن کو 7 روزہ جسمانی ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔

ملزم نے پولیس کو بتایا ہے کہ اس نے دسمبر میں اسکول ایک لاکھ روپے ماہانہ پر کرایہ پر لیا تھا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسکول میں تقریبا 10 خواتین اور پانچ مرد اساتذہ اور تقریبا 250 طلباء ہیں۔

پولیس نے بتایا کہ ریاست کی شکایت پر سٹیل ٹاؤن پولیس اسٹیشن میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

تفتیشی افسر کے مطابق ملزم نوکری دینے کے بہانے اساتذہ کو جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا تھا اور ویڈیوز بنا کر خواتین کو بلیک میل کرتا تھا۔

تفتیشی حکام نے یہ بھی بتایا کہ سی سی ٹی وی کیمروں کی ڈی وی آر کو ثبوت کے طور پر لے لیا گیا ہے جبکہ اس کے موبائل فون کی بھی جانچ کی جائے گی۔

افسر نے یہ بھی کہا کہ ایک متاثرہ نے ان سے رابطہ کیا جس کا بیان ریکارڈ کیا جائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس معاملے کی تحقیقات ایک اعلیٰ سطحی کمیٹی کر رہی ہے۔

افسر نے یہ بھی کہا کہ مزید مشتبہ افراد کے بارے میں معلومات سامنے آئی ہیں جن کے پاس ڈی وی آر اور ویڈیوز ہیں۔ انہوں نے یقین دلایا کہ پولیس آج رات (منگل) تک دو مشتبہ افراد کو گرفتار کر لے گی۔

اسسٹنٹ کمشنر نذیر ابڑو نے جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ضلعی انتظامیہ بھی واقعے کی تحقیقات کرے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ وہ محکمہ تعلیم سے رابطہ کریں گے تاکہ طلباء اپنی تعلیم جاری رکھ سکیں۔

پسندیدہ مضامین

پاکستاناسکول پرنسپل ریپ کیس: مشتبہ شخص نے 45 سے زائد خواتین کو...