30.9 C
Karachi
Tuesday, April 23, 2024

فوجی تنصیبات پر حملے کا منصوبہ زمان پارک سے شروع ہوا، جیو فینسنگ ریکارڈ

ضرور جانیے

اسلام آباد-جیو فینسنگ کے ذریعے حاصل کیے گئے ریکارڈ اور تکنیکی تجزیے سے ظاہر ہوتا ہے کہ اہم سرکاری اور فوجی تنصیبات کو نشانہ بنانے کا منصوبہ 8 مئی کو پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کی زمان پارک میں واقع رہائش گاہ پر تیار کیا گیا تھا۔

ریکارڈ کے مطابق عمران خان اور پارٹی کی سینئر قیادت حملہ آوروں کے ساتھ ساتھ زمان پارک سے تعلق رکھنے والی چھ دیگر اہم شخصیات سے بھی رابطے میں رہی۔

8 مئی کو زمان پارک سے اور جناح ہاؤس کے نام سے مشہور لاہور کارپوریشن کمانڈر ہاؤس میں توڑ پھوڑ کے دوران 158 موبائل فون نمبروں سے رابطہ کیا گیا تھا۔

ریکارڈ میں یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ یاسمین راشد، حماد اظہر اور محمود الرشید سمیت پی ٹی آئی کے سینئر رہنماؤں نے 9 مئی کے فسادات میں ملوث افراد کے ساتھ رابطے برقرار رکھے۔ دریں اثنا اعجاز چوہدری، اسلم اقبال اور مراد راس مظاہرین سے رابطے میں رہے۔

ڈی ڈے کے موقع پر پی ٹی آئی کے 6 اہم رہنماؤں کو 215 کالز کی گئیں جن میں سے 10 کالز مسعود اظہر کے فون سے کی گئیں، یاسمین کو 41 کالز کی گئیں جبکہ رشید نے 75 کالز کیں۔

دریں اثنا فواد چوہدری نے 50، سلیم اقبال نے 16 اور مراد راس نے جناح ہاؤس میں موجود توڑ پھوڑ کرنے والوں سے 23 بار رابطہ کیا۔

9 مئی کو سابق وزیر اعظم عمران خان کی گرفتاری کے خلاف احتجاج کے دوران پی ٹی آئی کارکنوں اور حامیوں نے جنرل ہیڈ کوارٹرز اور جناح ہاؤس سمیت فوجی تنصیبات پر دھاوا بول دیا، جسے فوج نے “یوم سیاہ” قرار دیا ہے۔ حالانکہ پارٹی نے توڑ پھوڑ میں ملوث ہونے سے انکار کیا ہے۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانفوجی تنصیبات پر حملے کا منصوبہ زمان پارک سے شروع ہوا، جیو...