15.9 C
Karachi
Friday, February 23, 2024

پی سی بی کا نئے سینٹرل کنٹریکٹ کا اعلان ، کھلاڑیوں کے معاوضوں میں 202 فیصد تک اضافہ

ضرور جانیے

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے مینز پلیئرز کے نئے سینٹرل کنٹریکٹ کا اعلان کردیا۔

پی سی بی کے مطابق تین سالہ کنٹریکٹ کے لیے تمام معاملات کامیابی سے طے پا چکے ہیں، سینٹرل کنٹریکٹ یکم جولائی 2023 سے 30 جون 2026 تک ہوگا۔

پی سی بی کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق 25 کھلاڑیوں کو سینٹرل کنٹریکٹ کی پیشکش کی گئی ہے، کنٹریکٹ میں آئی سی سی کی آمدنی کا حصہ شامل ہے جب کہ ریڈ بال اور وائٹ بال کے کنٹریکٹ کو ملا دیا گیا ہے۔ یہ کمیٹی کی سفارش پر کیا گیا ہے۔

پی سی بی کے مطابق نئے سینٹرل کنٹریکٹ میں کھلاڑیوں کا معاوضہ 127 سے بڑھا کر 202 فیصد کردیا گیا ہے۔

سینٹرل کنٹریکٹ لسٹ کو چار زمروں میں تقسیم کیا گیا ہے۔ کیٹیگری اے میں 3 کھلاڑی شامل ہیں جن کے معاوضے میں 202 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

کیٹیگری بی میں 6 کرکٹرز شامل ہیں جن کے معاوضے میں 144 فیصد اضافہ کیا گیا ہے جبکہ کیٹیگری سی میں 2 کرکٹرز شامل ہیں جن کے معاوضے میں 135 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ کیٹیگری ڈی میں 14 کرکٹرز شامل ہیں جن کے معاوضے میں 127 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

سینٹرل کنٹریکٹ سے خارج ہونے والے کرکٹرز میں اظہر علی، فواد عالم، نعمان علی، عابد علی، یاسر شاہ، آصف علی، حیدر علی، خوشدل شاہ، عثمان قادر اور زاہد محمود شامل ہیں۔

اس کے علاوہ گزشتہ سینٹرل کنٹریکٹ میں ایمرجنگ کیٹیگری میں شامل سلمان علی آغا اور محمد حارث کو ترقی دے دی گئی ہے جبکہ ایمرجنگ کیٹیگری ختم کردی گئی ہے۔

کیٹیگری اے

پی سی بی کے نئے سینٹرل کنٹریکٹ کی کیٹیگری اے میں کپتان بابر اعظم، محمد رضوان اور شاہین آفریدی شامل ہیں۔

کیٹیگری بی 

فخر زمان، حارث رؤف، امام الحق، محمد نواز، نسیم شاہ اور شاداب خان کو سینٹرل کنٹریکٹ کی کیٹیگری بی میں شامل کیا گیا ہے۔

کیٹیگری سی 

عماد وسیم اور عبداللہ شفیق سینٹرل کنٹریکٹ کی کیٹیگری سی میں شامل ہیں۔

کیٹیگری ڈی

اس کیٹیگری میں فہیم اشرف، حسن علی، افتخار احمد، احسان اللہ، محمد حارث، وسیم جونیئر، صائم ایوب، سرفراز احمد، سلمان آغا، سعود شکیل، شاہنواز دہانی، شان مسعود، اسامہ میر اور زمان خان شامل ہیں۔

پی سی بی کے مطابق ٹیسٹ میچ فیس میں 50 فیصد، ون ڈے کی فیس میں 25 فیصد اور ٹی ٹوئنٹی میں ساڑھے 12 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

سینٹرل کنٹریکٹ میں شامل کھلاڑیوں کو دو غیر ملکی لیگز میں کھیلنے کی اجازت ہوگی، اس کے علاوہ کھلاڑیوں کو ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے پر انٹرنیشنل میچ فیس کا 50 فیصد ملے گا۔

پی سی بی کے مطابق تین سالہ کنٹریکٹ کے دوران ہر 12 ماہ بعد کھلاڑیوں کی کارکردگی کا جائزہ لیا جائے گا۔

پسندیدہ مضامین

کھیلپی سی بی کا نئے سینٹرل کنٹریکٹ کا اعلان ، کھلاڑیوں کے...