25.9 C
Karachi
Friday, April 19, 2024

ایشیا کپ میں پاکستان کا سفر تمام، سری لنکا ٹورنامنٹ کے فائنل میں پہنچ گیا

ضرور جانیے

سری لنکا نے پاکستان کی جانب سے دیا گیا 252 رنز کا ہدف آخری اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کرلیا۔

کولمبو: ایشیا کپ میں پاکستان کا سفر ختم، سری لنکا ٹورنامنٹ کے فائنل میں پہنچ گیا۔ تفصیلات کے مطابق سری لنکا نے کولمبو میں کھیلے گئے سپر فور مرحلے کے اہم ترین میچ میں پاکستان کو شکست دے کر ایشیا کپ کے فائنل میں جگہ بنا لی۔ اتوار 17 ستمبر کو ایشیا کپ کے فائنل میں بھارت اور سری لنکا کی ٹیمیں مدمقابل ہوں گی۔

جمعرات کو کولمبو میں کھیلے گئے میچ میں سری لنکا نے پاکستان کی جانب سے دیا گیا 252 رنز کا ہدف آخری اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر حاصل کرلیا۔ سری لنکا کی اننگز کے دوران پاکستان کی ایک غلطی قومی ٹیم کی شکست کی سب سے بڑی وجہ بن گئی۔

لنکن بلے باز

محمد رضوان کی جانب سے 10 رنز پر ڈراپ ہونے والے  لنکن بلے باز اسلانکا میچ کے اختتام تک وکٹ پر موجود رہے اور آخری اوور میں اپنی ٹیم کو فتح دلانے میں کامیاب رہے، انہوں نے 49 رنز کی اننگز کھیلی۔

سری لنکا کی جانب سے کوشل مینڈس 91 رنز کی اننگز میں سب سے نمایاں رہے جبکہ پاکستان کی جانب سے افتخار احمد 3 وکٹیں لے کر سب سے نمایاں رہے۔

اس سے قبل ایشیا کپ سپر فور مرحلے کے اہم میچ میں پاکستان نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے سری لنکا کو 253 رنز کا ہدف دیا تھا لیکن ڈی ایل ایس سسٹم کے تحت لنکن بلے بازوں کے لیے ہدف ایک رنز سے کم ہوگیا۔

بارش کی وجہ سے تاخیر سے شروع ہونے کی وجہ سے میچ 45 اوورز فی اننگز تک محدود کردیا گیا تھا جسے بعد میں دوبارہ بارش کی وجہ سے 42 اوورز تک محدود کردیا گیا تھا۔

کولمبو میں کھیلے گئے سری لنکا کے خلاف میچ میں پاکستان کا آغاز اچھا نہیں رہا۔ عبداللہ شفیق اور فخر زمان کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا، فخر زمان کو 5 ویں اوور میں پرمود مدھوشن نے کلین بولڈ کیا۔

شراکت

بابر اعظم اور عبداللہ شفیق کے درمیان 50 سے زائد رنز کی شراکت قائم ہوئی، بابر اعظم 29 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔ عبداللہ شفیق بھی 52 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ محمد حارث نے پریتھانا کی گیند پر انہیں کیچ دے بیٹھ۔

حارث صرف 3 رنز بنا سکے۔ محمد نواز کو مہیش تھیکشانہ نے بولڈ کیا، انہوں نے 12 رنز بنائے۔ اس موقع پر بارش کی وجہ سے میچ روک دیا گیا، بعد ازاں اوورز میں مزید کٹوتی کی گئی اور میچ کو 42، 42 اوورز فی اننگز تک محدود کردیا گیا۔

بارش کے بعد محمد رضوان اور افتخار احمد نے جارحانہ کھیل کا مظاہرہ کیا، رضوان نے اپنی نصف سنچری مکمل کی، افتخار 47 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔

بارش سے متاثرہ میچ میں پاکستان نے مقررہ 42 اوورز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 252 رنز بنائے۔ محمد رضوان نے 73 گیندوں پر ناقابل شکست 86 رنز بنائے، وکٹ کیپر بلے باز کی اننگز میں 2 چھکے اور 6 چوکے شامل تھے۔ میچ میں قومی ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔

بابر اعظم نے کہا کہ گزشتہ روز اعلان کردہ ٹیم میں مزید دو تبدیلیاں کی گئی ہیں، امام الحق کو کمر میں درد ہے جبکہ سعود شکیل بخار کی وجہ سے پلیئنگ الیون کا حصہ نہیں ہیں۔

پاکستانی بیٹنگ لائن

اس موقع پر سری لنکن کپتان داسن شناکا کا کہنا تھا کہ پاکستانی بیٹنگ لائن میں جلد وکٹیں حاصل کرکے کم سے کم ہدف کو برقرار رکھنے کی کوشش کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ٹیم میں دو تبدیلیاں کی گئی ہیں، کوشل پریرا اور پرمود مدھوشن کو اسکواڈ میں شامل کیا گیا ہے۔

اس سے قبل میچ کا ٹاس بارش کے باعث تاخیر کا شکار ہوا جس کے باعث امپائر نے دونوں ٹیموں کے درمیان مقابلے کو 45، 45 اوورز تک محدود کردیا۔

پسندیدہ مضامین

کھیلایشیا کپ میں پاکستان کا سفر تمام، سری لنکا ٹورنامنٹ کے فائنل...