15.9 C
Karachi
Friday, February 23, 2024

لطیف کھوسہ کو عمران خان کا دفاع کرنا مہنگا پڑ گیا،پارٹی رکنیت معطل کر دی گئی

ضرور جانیے

ترجمان پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ سینئر وکیل کی سی ای سی رکنیت بھی معطل کردی گئی ہے، لطیف کھوسہ نے شوکاز نوٹس کا جواب نہیں دیا۔

اسلام آباد: عمران خان کا دفاع کرنے کی قیمت لطیف کھوسہ کو چکانی پڑی۔ تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی نے معروف وکیل لطیف کھوسہ کی پارٹی رکنیت معطل کردی۔ ترجمان پیپلز پارٹی کے مطابق سیکرٹری جنرل پی پی نیئر بخاری نے لطیف کھوسہ کی سی ای سی رکنیت بھی معطل کردی۔

یاد رہے کہ 14 ستمبر کو پیپلز پارٹی نے پارٹی کی خلاف ورزی پر سینئر قانون دان لطیف کھوسہ کو شوکاز نوٹس جاری کیا تھا، پی کے سیکریٹری جنرل نیئر بخاری نے شوکاز نوٹس جاری کیا تھا۔

لطیف کھوسہ سے 7 روز میں جواب طلب کرلیا۔ نوٹس میں کہا گیا ہے کہ سی ای سی ممبر ہونے کے باوجود آپ پارٹی کی اجازت کے بغیر کسی دوسری پارٹی کے سربراہ کا دفاع کر رہے ہیں۔

تنقید کا نشانہ

بار کنونشن میں، آپ نے سائفر کے معاملے پر ریاستی پالیسی کو تنقید کا نشانہ بنایا. نوٹس میں کہا گیا ہے، ‘مجھے بتائیں کہ آپ کے خلاف مستقل کارروائی کیوں نہ کی جائے۔ 7 دن کے اندر شوکاز نوٹس کا جواب دیں ورنہ آپ کی پارٹی رکنیت ختم ہو جائے گی۔

جبکہ پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما لطیف کھوسہ نے شوکاز نوٹس کے جواب میں کہا تھا کہ پارٹی کی جانب سے کوئی شوکاز موصول نہیں ہوا، مجھے پارٹی سے کون نکال سکتا ہے۔

? مجھے پیپلز پارٹی کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس میں شرکت کی دعوت ملی لیکن سپریم کورٹ میں مصروفیت کی وجہ سے اجلاس میں شرکت نہیں کر سکتا۔

واضح رہے کہ لطیف اکثر مختلف تقریبات اور پریس کانفرنسز میں چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کا دفاع کرتے نظر آتے ہیں اور وہ سائفر کے معاملے پر کھل کر اپنے جذبات کا اظہار کرتے رہتے ہیں۔

کھوسہ نے کہا تھا کہ چیئرمین تحریک انصاف کو قتل کرنے کی سازش ہو رہی ہے، خدشہ ہے کہ انہیں اٹک جیل میں قتل کر دیا جائے گا۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانلطیف کھوسہ کو عمران خان کا دفاع کرنا مہنگا پڑ گیا،پارٹی رکنیت...