24.9 C
Karachi
Monday, March 4, 2024

یونیورسٹی کے احاطے سے طالب علم کے ‘اٹھائے جانے’ کے بعد جامعہ کراچی کے طلبہ کا احتجاج

ضرور جانیے

کراچی: جامعہ کراچی کے احاطے سے ایک طالب علم کو حراست میں لیے جانے کے بعد طلبہ نے احتجاج کیا۔

مظاہرین نے جیو نیوز کو بتایا کہ شعبہ اردو میں زیر تعلیم طالب علم کو سادہ کپڑوں میں ملبوس افراد نے اٹھا لیا۔ انہوں نے بتایا کہ ان افراد نے دعویٰ کیا کہ ان کا تعلق قانون نافذ کرنے والے ادارے سے ہے۔

تاہم جامعہ کراچی کے سیکیورٹی ایڈوائزر ڈاکٹر معیز خان کا کہنا ہے کہ رینجرز نے خود کو اس واقعے سے الگ کر لیا ہے۔

یونیورسٹی انتظامیہ اب کلوز سرکٹ ٹیلی ویژن (سی سی ٹی وی) فوٹیج کا تجزیہ کر رہی ہے تاکہ طالب علموں اور ان لوگوں کی شناخت کی جا سکے جنہوں نے انہیں اٹھایا تھا۔

واقعے کے بعد طلباء نے جامعہ کراچی کے سلور جوبلی گیٹ کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا اور یونیورسٹی روڈ کو بلاک کردیا۔ تاہم، پولیس کی درخواست پر، وہ منتشر ہوگئے اور اب یونیورسٹی کے انتظامی بلاک کے سامنے احتجاج کر رہے ہیں۔

اسلامی جمعیت طلبہ (آئی جے ٹی) کا دعویٰ ہے کہ طالب علم اس کا کارکن تھا اور اس نے اس وقت تک احتجاج جاری رکھنے کا عہد کیا جب تک اسے رہا نہیں کیا جاتا۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانیونیورسٹی کے احاطے سے طالب علم کے 'اٹھائے جانے' کے بعد جامعہ...