29.9 C
Karachi
Thursday, June 13, 2024

غیر شرعی نکاح کیس: عمران خان کو 25 ستمبر کو جیل سے عدالت میں پیش کرنےکا حکم

ضرور جانیے

چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان اور ان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کے خلاف غیر قانونی نکاح کیس میں عدالت نے سابق وزیراعظم عمران خان کو طلبی کا نوٹس جاری کردیا۔

اسلام آباد کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت کے جج قدرت اللہ نے چیئرمین پی ٹی آئی اور بشریٰ بی بی کی غیر قانونی نکاح کیس میں چیئرمین پی ٹی آئی کو طلبی کا نوٹس جاری کردیا۔

عدالت نے تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کو 25 ستمبر کو جیل سے عدالت میں پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

ذرائع کے مطابق عدالت نے عملے کو اٹک جیل سپرنٹنڈنٹ کے وارنٹ جاری کرنے کی بھی ہدایت کی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز چیئرمین پی ٹی آئی اور ان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کے خلاف مبینہ غیر قانونی شادی سے متعلق کیس کی سماعت ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج اسلام آباد قدرت اللہ کی عدالت میں ہوئی تھی۔

اسلام آباد کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت نے بشریٰ بی بی کے خلاف غیر قانونی شادی کیس میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا۔

وکیل صافی نعیم پنجوتھا نے بھی بشریٰ بی بی کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست دائر کی اور کہا کہ عدالت نے بشریٰ بی بی کی حاضری سے مستقل استثنیٰ کی درخواست منظور کرلی ہے۔

جج قدرت اللہ نے ریمارکس دیے کہ فرد جرم عائد کرنے کا معاملہ سامنے آیا تو بشریٰ بی بی کی موجودگی ضروری ہوگی جبکہ وکیل نعیم پنجوتھا نے کہا کہ شیر افضل مروت دائرہ اختیار کی درخواست پر دلائل دیں گے۔

تاہم 25 ستمبر کو عدالت نے چیئرمین پی ٹی آئی اور بشریٰ بی بی کے خلاف غیر قانونی شادی کیس کی سماعت فریقین کے وکلا کو دلائل پیش کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے ملتوی کردی۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانغیر شرعی نکاح کیس: عمران خان کو 25 ستمبر کو جیل سے...