15.9 C
Karachi
Thursday, February 22, 2024

گوگل سی ای او نے 12 ہزار ملازمین فارغ کرنے کا فیصلہ مشکل ترین قرار دے دیا

ضرور جانیے

گوگل اور الفابیٹ کے سی ای او سیندر پچائی نے جنوری 2022 کے 12 ہزار ملازمین کو فارغ کرنے کے فیصلے کو سب سے مشکل قرار دیا ہے۔

گوگل کی حالیہ آل ہینڈز میٹنگ میں برطرفی کے عمل پر بحث کے دوران سندر پچائی نے اعتراف کیا کہ 12 ہزار ملازمین کو فارغ کرنے کا فیصلہ متنازعہ تھا لیکن انہوں نے اس فیصلے کا دفاع بھی کیا۔

بزنس انسائیڈر کی ایک رپورٹ کے مطابق انہوں نے کہا کہ 12 ہزار ملازمین (جو الفابیٹ کی افرادی قوت کا 6 فیصد ہے) کی برطرفی سے کمپنی کی مالی حالت کو بہتر بنانے اور مزید معاشی ترقی کو ممکن بنانے میں مدد ملے گی۔

انہوں نے کہا کہ ملازمین کو فارغ کرنے کے فیصلے میں تاخیر سے کمپنی کو اہم شعبوں میں سرمایہ کاری کرنے اور خود کو صورتحال کے مطابق ڈھالنے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے اعتراف کیا کہ کمپنی چھانٹی کے عمل کو بہتر طریقے سے مکمل کر سکتی تھی۔

ورک فورس کے مورال پر اس فیصلے کے ممکنہ منفی اثرات کے سوال پر سندر پچائی نے کہا کہ ملازمین کے حوصلے یقینی طور پر متاثر ہوں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ کمپنی کو کم از کم 25 سالوں میں ایسی صورتحال کا سامنا نہیں کرنا پڑا تھا۔ ملازمت سے نکالے گئے ملازمین کے کام کے اکاؤنٹس تک رسائی روکنے کا فیصلہ ایک مشکل فیصلہ تھا۔

پسندیدہ مضامین

ٹیکنالوجیگوگل سی ای او نے 12 ہزار ملازمین فارغ کرنے کا فیصلہ...