15.9 C
Karachi
Friday, February 23, 2024

پورا کراچی جرائم سے پاک کریں، وزیر اعلیٰ کا پولیس کو آپریشن کرنے کا حکم

ضرور جانیے

نگران وزیراعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر نے کراچی پولیس کو اسٹریٹ کرمنلز کے خلاف ٹارگٹڈ آپریشن شروع کرنے کی ہدایات جاری کردی ہیں۔

نگراں وزیراعلیٰ سندھ کی زیر صدارت سندھ ایپکس کمیٹی کا اجلاس ہوا جس کے دوران کراچی پولیس چیف اور ایڈیشنل آئی جی نے اجلاس کو اسٹریٹ کرائم پر بریفنگ دی۔

نگراں وزیراعلیٰ سندھ کے ترجمان کے مطابق کراچی پولیس کے سربراہ نے ایپکس کمیٹی کے اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ رواں سال شہر قائد میں اسٹریٹ کرائم کے 61098 کیسز رپورٹ ہوئے، سب سے زیادہ 17570 کیسز ضلع شرقی میں رپورٹ ہوئے۔

کراچی پولیس کے سربراہ نے اجلاس کو بتایا کہ شہر میں قتل کے مقدمات میں 329 اور اغوا برائے تاوان کے مقدمات میں 62 ملزمان کو گرفتار کیا گیا جبکہ بھتہ خوری کے مجموعی طور پر 100 مقدمات ہیں جن میں 86 ملزمان کو گرفتار کیا گیا ہے۔

ڈرگ مافیا

ترجمان وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کراچی پولیس چیف کے مطابق اسٹریٹ کرائم کے واقعات میں ڈرگ مافیا اور غیر قانونی تارکین وطن ملوث ہیں جبکہ پولیس جرائم کی روک تھام سے زیادہ احتجاج اور دیگر فرائض پر تعینات ہے۔

اجلاس کے دوران نگراں وزیراعلیٰ سندھ مقبول باقر نے کچی آبادی میں اسٹریٹ کرمنلز کے خلاف آپریشن شروع کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کراچی پولیس چیف کو پورے شہر کو اسٹریٹ کرائم سے پاک کرنے اور تھانوں کی حالت بہتر بنانے کا حکم دیا۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کراچی شہر میں گٹکا اور دیگر منشیات برآمد ہونا افسوسناک ہے، پولیس اس پر فوری اور سخت کارروائی کرے۔

علاوہ ازیں ایپکس کمیٹی کے اجلاس میں اسنیپ چیکنگ، ضمانت پر آزادانہ مجرمانہ نگرانی اور مفرور اور مفرور افراد کے خلاف آپریشن کا فیصلہ کیا گیا اور آپریشن کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کے بعد نگران وزیراعلیٰ نے مجرموں کے خلاف آپریشن کرنے کا فیصلہ کیا۔ اس کی بھی منظوری دی گئی۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانپورا کراچی جرائم سے پاک کریں، وزیر اعلیٰ کا پولیس کو آپریشن...