15.9 C
Karachi
Friday, February 23, 2024

ارشد ندیم ورلڈ ایتھلیٹکس چیمپیئن شپ میں چاندی کا تمغہ جیتنے والے پہلے پاکستانی بن گئے

ضرور جانیے

ہنگری کے شہر بوڈاپسٹ میں جاری ورلڈ ایتھلیٹکس چیمپیئن شپ میں 87.82 میٹر تھرو کے ساتھ اپنے ملک کے لیے پہلا تمغہ جیتنے والے پہلے پاکستانی کھلاڑی بن گئے ہیں۔

بھارت کے نیرج چوپڑا 88.17 میٹر کے اپنے بہترین تھرو کے ساتھ گولڈ میڈل حاصل کرنے میں کامیاب رہے۔

کھیل کے آغاز میں ندیم صرف 74.80 میٹر تک پہنچ کر اچھا آغاز نہیں کر سکے تاہم انہوں نے اپنی دوسری کوشش میں 82.81 میٹر کی شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے واپسی کی۔

یہ پاکستانی تھرور کا تیسرا تھرو تھا جو سب سے بڑی کامیابی تھی کیونکہ اس نے 87.82 میٹر کی بلندی تک رسائی حاصل کی جو ان کے سیزن کا بہترین تھرو تھا۔

میاں چنوں میں پیدا ہونے والے اولمپیئن کی پانچویں کوشش 80 میٹر کے نشان تک نہیں پہنچ سکی تاہم وہ اپنی چھٹی اور آخری کوشش میں 81.86 میٹر کا فاصلہ طے کرنے میں کامیاب رہے۔

تمغے کی تصدیق

ایتھلیٹ کے تمغے کی تصدیق اس وقت ہوئی جب جرمنی کے جولین ویبر 86.79 میٹر کے اپنے نشان کو عبور کرنے میں ناکام رہے کیونکہ ان کا آخری تھرو 80 میٹر سے کم رہا۔

اپنی آخری کوشش میں جاکوب وڈلیجچ کے فاؤل نے اس بات کی تصدیق کی کہ ندیم آخری دو میں ہوں گے۔

اپنی چوتھی کوشش میں، 26 سالہ کھلاڑی صرف 87.12 میٹر تک پہنچ سکے، جو ان کی توقع سے بہت کم تھا۔

اس سے قبل ندیم نے 86.79 میٹر کے بہترین تھرو کے ساتھ ورلڈ ایتھلیٹکس چیمپیئن شپ کے فائنل کے لیے کوالیفائی کیا تھا۔

اولمپکس کا معیار 85.50 میٹر تھا جسے ندیم کامیابی سے عبور کرنے میں کامیاب رہے۔

تازہ ترین جیت ندیم کے ٹوکیو اولمپکس میں پانچویں نمبر پر آنے کے بعد منظر عام پر آئی، ایک ایسا کارنامہ جس نے ایتھلیٹ کی پوری زندگی کو تبدیل کر دیا، جس نے ان کی شخصیت پر زبردست اثر ڈالا۔

گزشتہ سال ندیم نے امریکہ میں ہونے والی ورلڈ چیمپیئن شپ میں بھی پانچویں پوزیشن حاصل کی تھی۔

اس کے فورا بعد ہی انہوں نے برمنگھم میں ہونے والے کامن ویلتھ گیمز میں 90.18 میٹر کا اپنا بہترین تھرو ریکارڈ کیا جو چار سالہ ایونٹ کا ریکارڈ تھرو بھی ہے۔

اس کے بعد اسٹار ایتھلیٹ کو لندن میں کہنی اور بائیں گھٹنے کی سرجری کا سامنا کرنا پڑا، ان کی بحالی میں وقت لگا اور مئی میں کوئٹہ میں 34 ویں نیشنل گیمز میں مسابقتی میدان میں واپس آئے۔

ایونٹ میں انہیں اس وقت شدید دھچکا لگا جب ان کے دائیں گھٹنے میں چوٹ لگ گئی جس کے بعد انہیں بنکاک میں ہونے والی ایشین چیمپیئن شپ میں شرکت نہ کرنے پر مجبور ہونا پڑا۔

پسندیدہ مضامین

کھیلارشد ندیم ورلڈ ایتھلیٹکس چیمپیئن شپ میں چاندی کا تمغہ جیتنے والے...