29.9 C
Karachi
Saturday, February 24, 2024

پشاور کے بعد لاہور ہائیکورٹ نے بھی پی ٹی آئی کو بڑا جھٹکا دے دیا

ضرور جانیے

پشاور ہائی کورٹ سے مایوسی کے بعد لاہور ہائی کورٹ نے بھی پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کو بڑا جھٹکا دے دیا ہے۔

گزشتہ روز لاہور ہائی کورٹ میں تحریک انصاف سے بیٹ کا نشان واپس لینے کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی جس میں جسٹس جواد حسن نے تحریک انصاف کی درخواست پر سوالات اٹھاتے ہوئے کہا کہ الیکشن کمشنر پنجاب پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ کیسے قبول کرسکتے ہیں۔ ? الیکشن کمشنر پنجاب کی اپیل پشاور ہائی کورٹ میں زیر التوا ہے، کیا صوبائی الیکشن کمشنر اپنے چیف الیکشن کمشنر کے خلاف فیصلہ دے سکتے ہیں؟

جسٹس جواد حسن نے بیٹ سائن واپس لینے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا تھا۔

اور آج لاہور ہائی کورٹ نے گزشتہ روز محفوظ فیصلہ سناتے ہوئے پی ٹی آئی کی جانب سے انتخابی نشان واپس لینے کے خلاف درخواست مسترد کردی۔

جسٹس جواد حسن نے تحریک انصاف کے رہنما عمر آفتاب ڈھلون کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے دی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز پشاور ہائی کورٹ نے پی ٹی آئی انٹرا پارٹی الیکشن اور انتخابی نشان کیس پر حکم امتناع واپس لیتے ہوئے الیکشن کمیشن کا 22 دسمبر کا فیصلہ بحال کردیا تھا جس کے بعد پی ٹی آئی سے بیٹ کا نشان چھین لیا گیا تھا۔ .

تحریک انصاف کے چیئرمین بیرسٹر گوہر نے الیکشن کمیشن کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ جانے کا اعلان کیا ہے۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانپشاور کے بعد لاہور ہائیکورٹ نے بھی پی ٹی آئی کو بڑا...