25.9 C
Karachi
Friday, April 19, 2024

چار روز میں مزید 26 افراد ڈینگی کا شکار

ضرور جانیے

راولپنڈی: راولپنڈی میں گزشتہ چار روز کے دوران ڈینگی کے مزید 26 مریض رپورٹ ہوئے جس کے بعد رواں سیزن میں ڈینگی کے مریضوں کی مجموعی تعداد 137 ہوگئی۔

انسداد ڈینگی مہم کے لئے فنڈز خرچ کرنے اور افرادی قوت بھرتی کرنے کے باوجود ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی راولپنڈی میں وائرس کو پھیلنے سے روکنے میں ناکام رہی ہے۔

ماہرین نے ہیلتھ اتھارٹی کو خبردار کیا تھا کہ بارشوں کے بعد ڈینگی وائرس پھیل جائے گا اور اسے نشیبی علاقوں میں پھیلنا پڑے گا۔ لیکن اتھارٹی نے ان ہدایات کو نظر انداز کیا اور اس کے بجائے اعلی حکام کو ان چالانوں اور جرمانوں کے بارے میں پریزنٹیشن دینے کو ترجیح دی جو انہوں نے معیاری آپریٹنگ طریقہ کار کی خلاف ورزی کرنے والوں کو جاری کیے تھے۔

موسلا دھار بارش

شہر میں موسلا دھار بارش کے بعد ڈینگی کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہوگیا ہے۔ ڈینگی کے زیادہ تر مریض لیہہ نالے سے ملحقہ تین سرکاری اسپتالوں میں آئے جن میں چکلالہ، ڈھوکے منشی، نصیر آباد، ڈھوکے کشمیریاں، چمن زار کالونی، ڈھوکے منگتل، رحمت آباد اور چھاؤنی کے علاقے شامل ہیں۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق رواں سیزن میں ہولی فیملی ہسپتال، بینظیر بھٹو اسپتال اور ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں ڈینگی کے 137 مریض پہنچے۔

103 مریضوں کو علاج کے بعد اسپتالوں سے چھٹی دے دی گئی لیکن 24 اب بھی داخل ہیں۔

30 فیصد خواتین اور 70 فیصد مرد اسپتالوں میں وائرس سے متاثر ہوئے۔ اب تک راولپنڈی شہر سے 87، اسلام آباد سے 25، اٹک سے 8 اور بھکر، گجرات، کوہاٹ، لکی مروت، میانوالی اور مظفر آباد سے ایک ایک مریض سامنے آیا ہے۔

تاہم، ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کے پاس نجی اسپتالوں، کلینکس اور میڈیکل پریکٹیشنرز کا کوئی ڈیٹا نہیں ہے، حالانکہ لوگوں کی اکثریت نجی کلینکس کو ترجیح دیتی ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ٹیموں نے گزشتہ ہفتے 21 ہزار 528 گھروں کی چیکنگ کی اور 669 گھروں میں ڈینگی لاروا پایا جبکہ 10 ہزار 239 بیرونی مقامات کا معائنہ کیا اور 183 مقامات پر ڈینگی لاروا پایا گیا۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ کمرشل دکانوں کے مالکان کی جانب سے اسٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجرکی خلاف ورزی پر 15 دکانوں کو سیل، 71 ایف آئی آر درج، 2 لاکھ 57 ہزار روپے جرمانے اور 13 چالان جاری کیے گئے۔

ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر سجاد محمود ڈینگی وائرس کے مزید پھیلاؤ سے بچنے کے لئے اتھارٹی کی جانب سے اٹھائے گئے اقدامات پر تبصرہ کرنے کے لئے دستیاب نہیں تھے۔

پسندیدہ مضامین

صحتچار روز میں مزید 26 افراد ڈینگی کا شکار