29.9 C
Karachi
Saturday, February 24, 2024

ایبٹ آباد میں سیکیورٹی خدشات پر 15 کیبل کاریں سیل

ضرور جانیے

ایبٹ آباد-حویلیاں اور گلیات میں ضلعی انتظامیہ نے گزشتہ تین روز کے دوران 15 کیبل کاروں کو ان کی خراب حالت اور حفاظتی اقدامات نہ ہونے کی وجہ سے سیل کر دیا۔

تحصیلدار حویلیاں محمد اعجاز نے ٹیکنیکل ٹیم، تحصیل میونسپل ایڈمنسٹریشن (ٹی ایم اے)، کمیونیکیشن اینڈ ورکس ڈپارٹمنٹ (سی اینڈ ڈبلیو) اور ریونیو اسٹاف کے ہمراہ انسپکشن کے دوران اسٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجر (ایس او پیز) کی خلاف ورزی پر کیبل کاروں کے خلاف کارروائی کی۔ کیبل کاروں کو تحصیل حویلیاں میں پونا، ہرلان اور ستورہ میں سیل کیا گیا جبکہ تحصیل کوکل برسین میں دو دیگر کو سیل کیا گیا۔

اسسٹنٹ کمشنرز اس وقت اپنے متعلقہ علاقوں میں ٹیکنیکل ٹیموں کے ہمراہ سائٹ کا دورہ کر رہے ہیں اور ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والی کسی بھی کیبل کار کے خلاف سخت کارروائی کو یقینی بنا رہے ہیں۔ اسسٹنٹ کمشنر لبنیٰ اقبال کی سربراہی میں تحصیل حویلیاں کے مختلف علاقوں میں کیبل کاروں کا معائنہ کرنے کے لئے ٹی ایم اے، سی اینڈ ڈبلیو اور ریونیو عملے پر مشتمل ٹیم نے کی۔

کیبل کاروں کی فٹنس

انہوں نے ان کیبل کاروں کی فٹنس کا جائزہ لیا اور متعلقہ افراد کو ہدایت کی کہ وہ ایس او پیز پر مکمل عمل کریں، شہریوں کے جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنائیں جبکہ کیبل کاروں کی فٹنس کو بھی یقینی بنائیں۔

ایبٹ آباد میں اس اقدام سے عوام کی بڑی تعداد کو مشکلات کا سامنا

ایبٹ آباد کی ضلعی انتظامیہ شہریوں کے جان و مال کے تحفظ اور مستقبل میں ممکنہ ناخوشگوار واقعات کی روک تھام کے لئے قانون پر سختی سے عملدرآمد کر رہی ہے۔

تاہم ان اقدامات کی وجہ سے ان علاقوں میں لوگوں کی ایک بڑی تعداد کو مشکلات کا سامنا ہے۔ یہ خاص طور پر واضح ہے کیونکہ کیبل کاریں دور دراز پہاڑی علاقوں میں رہنے والے رہائشیوں کے لئے مواصلات کے واحد ذریعہ کے طور پر کام کرتی ہیں۔ طلباء، روزمرہ مسافروں اور عام لوگوں سمیت بہت سے افراد نے اپنی نقل و حمل کی ضروریات کے لئے ان کیبل کاروں پر بہت زیادہ انحصار کیا۔ لوگوں نے کیبل کاروں کی بندش پر بھی تشویش کا اظہار کیا ہے جو سینکڑوں گاؤوں تک مواصلات کا واحد ذریعہ ہے۔

تحریک ہزارہ کے چیئرمین سردار گوہر زمان نے انتظامیہ پر زور دیا کہ حویلیاں پونا کیبل کار کو دوبارہ کھولا جائے، جو تقریبا دو درجن دیہات وں کے لئے ایک کنکشن کے طور پر کام کرتی ہے اور طلباء اور عام لوگ دونوں کی طرف سے بڑے پیمانے پر استعمال کیا جاتا ہے۔ انہوں نے انتظامیہ پر زور دیا کہ وہ متاثرہ افراد کے لئے نقل و حمل کے متبادل انتظامات کرے۔

چیئر لفٹ سائٹ

یونین کونسل ڈیل اور نارا کے عوامی نمائندوں نے ہرلان چیئر لفٹ سائٹ پر احتجاجی مظاہرہ کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ چیئر لفٹوں کی بندش سے مقامی آبادی کے لیے بے شمار مسائل پیدا ہوگئے ہیں۔

ولیج کونسل دیوالی کے چیئرمین سردار اسد جاوید خان، تحریک انصاف تحصیل حویلیاں کے نائب صدر سردار منیر صفدر، چیئرمین سردار راشد برکت، چیئرمین ویلج کونسل گوہرہ عبدالرشید اعوان، چیئرمین بودلہ ساجد قریشی اور کونسلر نواز نے بتایا کہ چیئرمین لفٹوں کے خلاف کارروائی کا فیصلہ بٹگرام چیئر لفٹ واقعے کے تناظر میں کیا گیا ہے۔

پسندیدہ مضامین

پاکستانایبٹ آباد میں سیکیورٹی خدشات پر 15 کیبل کاریں سیل